علوم القرآن

بحیثیت مسلمان ہمارا اس بات پر ایمان ہے کہ قرآن مجید اللہ تعالی کی آخری کتاب ہے۔ بلا مبالغہ لاکھوں کی تعداد میں مسلمان اس کتاب کو حفظ کرتے ہیں۔ قرآن کو کچھ حصہ تو ہر مسلمان کو یاد ہوتا ہی ہے۔ بہت سے مسلمان اس کتاب کی روزانہ تلاوت کرتے ہیں، خاص کر رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں اس سے مسلمانوں کا تعلق مزید گہرا ہو جایا کرتا ہے۔
غیر عرب مسلمانوں کے ہاں یہ عام رواج ہے کہ قرآن کو سمجھ کر پڑھنے سے زیادہ ان کے ہاں بلا سوچے سمجھے تلاوت پر زور دیا جاتا ہے۔ ہم محض ثواب کے حصول کے لئے قرآن پڑھتے ہیں مگر اس کی دی ہوئی عظیم آسمانی ہدایت سے محروم رہ جاتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ہم سیدھے راستے سے بارہا بھٹک جاتے ہیں۔

لوگ قرآن کی تلاوت تو کرتے ہیں مگر انہیں اس کی ہدایت سے کوئی سروکار نہیں ہوتا ہے اور وہ اپنی عملی زندگی میں شیطان کی پیروی کر رہے ہوتے ہیں۔ اللہ تعالی کا شکر ہے کہ یہ رجحان اب تبدیل ہو رہا ہے اور مسلمان بالخصوص نوجوان نسل قرآن مجید کے مطالعے کی طرف لوٹ رہی ہے۔ نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلموں میں بھی اس کتاب کے مطالعے کا رجحان پیدا ہو چکا ہے جس نے کروڑوں انسانوں کی زندگی تبدیل کی۔

قرآن مجید چونکہ عربی زبان میں نازل ہوا ہے، اس وجہ سے اس کتاب کے براہ راست مطالعے کے لئے نزول قرآن کے زمانے کی عربی زبان سیکھنا ضروری ہے۔ زبان سیکھنا ایک طویل عمل ہے۔ اس وجہ سے مناسب یہی ہے کہ عربی زبان سیکھنے کے ساتھ ساتھ مختلف دینی علوم کے مبادیات اور متوسط درجے کے تصورات کا مطالعہ اردو یا انگریزی زبان میں کر لیا جائے۔ اس طرح سے عربی سیکھنے کے ساتھ ساتھ آپ دینی علوم کے اہم تصورات سے واقف ہو جائیں گے۔ زبان سیکھنے کے بعد آپ ان علوم کا اختصاصی درجے (Specialist Level) میں مطالعہ کر سکیں گے۔ یہی وجہ ہے کہ “علوم القرآن پروگرام” کے تمام ماڈیولز کو اردو اور انگریزی میں مہیا کیا جا رہا ہے۔

غیر عربوں کے لئے قرآن مجید کے مطالعے کا ایک طریقہ تو یہ ہے کہ آپ قرآن کا ترجمہ پڑھنا شروع کر دیں۔ یہ طریقہ ان لوگوں کے لئے مفید ہے جو اس کے مضامین سے کچھ واقفیت حاصل کر نا چاہتے ہوں۔ مگر وہ لوگ جو اپنی زندگیوں کو دین کی دعوت کے لئے وقف کرنے کا عزم رکھتے ہوں، ان کے لئے مناسب یہی ہے کہ وہ علوم القرآن اور دیگر متعلقہ علوم جیسے حدیث، فقہ، تاریخ، اخلاقیات، فلسفہ اور علم الکلام کا تفصیلی مطالعہ کریں تاکہ وہ دین کو اس کے پورے استدلال کے ساتھ سمجھ کر دنیا کے سامنے پیش کر سکیں۔ یہ پروگرام ایسے ہی لوگوں کے لئے تیار کیا گیا ہے۔

دین کے ایسے طالب علم جو علم اور ذہانت کے اعتبار سے مختلف سطح پر ہوں، ان کی ضروریات مختلف ہوتی ہے۔ طالب علموں میں اس فرق کو مدنظر رکھتے ہوئے اس پروگرام کو سات ماڈیولز میں تقسیم کیا گیا ہے:

· ماڈیول QS01: یہ بالکل ابتدائی درجے کے طلباء کے لئے ہے۔ اس میں ہم قرآن مجید کے کچھ مخصوص اقتباسات لے کر ان پر عملی کام کریں گے۔ اس ماڈیول کے اختتام پر ہم قرآن مجید کے پیغام سے متعارف ہونے کے ساتھ ساتھ اس کا مطالعہ کرنے کے لئے درکار بنیادی معلومات بھی حاصل کر چکے ہوں گے۔ اسی ماڈیول میں ہم یہ کوشش کریں گے کہ اپنا تزکیہ نفس کرتے ہوئے اپنی شخصیت کو قرآن کے بیان کردہ آئیڈیل کے مطابق ڈھال سکیں۔

· ماڈیول QS02-QS06: یہ درمیانے درجے کے طلباء کے لئے ہیں۔ اس میں ہم اردو زبان میں لکھی گئی قرآن کی مختلف تفاسیر کا تقابلی مطالعہ کریں گے۔ ان ماڈیولز کے اختتام پر ہم علوم القرآن سے متعلق اہم ترین مباحث کا تفصیلی مطالعہ کر چکے ہوں گے۔ قرآن مجید پر عمل اور اس کے مطابق اپنی زندگیوں کو ڈھالنے کا عمل ہم اس مطالعے کے دوران جاری رکھیں گے۔

· ماڈیولQS07: یہ ماڈیول ان طلباء کے لئے ہے جو علوم القرآن میں اختصاصی درجے (Specialist level) کی مہارت حاصل کرنا چاہتے ہوں۔ قرآن مجید کی زبان، تفسیر، فقہی و کلامی مسائل ، تاریخ وغیرہ سے متعلق اعلی درجے کے مباحث کا مطالعہ انشاء اللہ اس درجے پر کیا جائے گا۔ غیر مسلم اہل علم بالخصوص مستشرقین کی جانب سے قرآن مجید پر جو سوالات و اشکالات اٹھائے گئے ہیں، ان کا مطالعہ کر کے ان کے جوابات کے حصول کی کوشش کی جائے گی۔

اس پروگرام کے مقاصد یہ ہیں:
· قرآن مجید کے مضامین کا تفصیلی مطالعہ
· مختلف قرآنی تفاسیر کا تقابلی مطالعہ
· اپنی شخصیت اور کردار کو قرآن کے تقاضوں کے مطابق ڈھالنے کی کوشش
· قرآنی تعلیمات سے متعلق اہم علمی، عقلی اور عملی مسائل کا تعارف
· قرآنی اسالیب سے واقفیت
· قرآن مجید کی آیات کے پس منظر سے واقفیت
· اس بات کا فہم کہ مختلف دینی، فقہی اور مسلکی پس منظر سے تعلق رکھنے والے مفسرین (تفسیر لکھنے والے) قرآن کو کیسے سمجھتے ہیں

مطالعے کا طریق کار
علم التعلیم کے میدان میں ہونے والی مختلف تحقیقات سے یہ بات ثابت ہوئی کہ عام ذہانت کا حامل انسان جو کچھ سنتا ہے ، وہ اس کا 30 سے 40 فیصد یاد رکھتا ہے؛ جو کچھ وہ دیکھتا ہے، اس کا 60 تا 70فیصد اس کے ذہن میں راسخ ہو جاتا ہے اور جو کچھ وہ عملاً کرتا ہے، اس کا 80 سے 90 فیصد وہ سیکھ لیتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ہم نے اس پروگرام میں ایسا طریقہ اختیار کیا ہے جس میں طالب علم کو قرآن مجید کے ایک منتخب نصاب پر عملی کام کرنا پڑے۔ اس عملی کام کے نتیجے میں قرآن مجید کی تعلیمات اس کی روح کی گہرائیوں میں اترتی چلی جائیں اور قرآن کا پیغام اس کی رگوں میں خون کی طرح گردش کرنے لگے۔ اس عملی کام میں کچھ نفسیاتی، سماجی اور دعوتی نوعیت کی مشقیں ہیں جو قرآن مجید کے مطالعے کے دوران ہم کریں گے۔

اس پروگرام میں ہم قرآن مجید کی پانچ تفاسیر کا تقابلی مطالعہ کریں گے تاکہ ہم یہ جان سکیں کہ مختلف پس منظر اور مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد قرآن کو کس طریقے سے سمجھتے ہیں۔ ان تفاسیر اور ان کے مصنفین کا تعارف تفسیر کے نام کے حروف تہجی کی ترتیب سے یہاں پیش کیا جا رہا ہے:

· احسن البیان از حافظ صلاح الدین یوسف
· تفہیم القرآن از سید ابو الاعلی مودودی (1903-1979)
· ضیاء القرآن از پیر محمد کرم شاہ الازہری (1918-1998)
· معارف القرآن از مفتی محمد شفیع عثمانی (1886-1976)
· تفسیر نمونہ از آیت اللہ ناصر مکارم شیرازی (پیدائش 1924)

ان پانچوں تفاسیر کے ساتھ ساتھ ہماری ٹیکسٹ بکس یا ورک بکس اضافی ہوں گی۔ اس کورس میں ہم قرآن مجید کا ایک منظم انداز میں مطالعہ کریں گے اور ہماری ورک بکس آپ کو پانچوں تفاسیر کا منظم انداز میں مطالعہ کرنے میں مدد دے گی۔ ان میں قرآن مجید کے مختلف حصوں کو ان کے اندرونی نظم (Structure) کی بنیاد پر ابواب میں تقسیم کیا گیا ہے۔ ہر باب کے شروع میں کچھ تعارف ہے اور اس کے ساتھ اسائنمنٹس دی گئی ہیں۔

اس وقت علوم القرآن پروگرام کے چھ ماڈیولز دستیاب ہیں۔ ساتویں اور آخری ماڈیول کی تیاری پر کام چل رہا ہے جس میں انشاء اللہ نہایت ہی اعلی سطح کے علمی مباحث کی تعلیم دی جائے گی۔ اس ماڈیول کے دو حصے ہوں گے۔ پہلے حصے میں وحی اور عقل سے متعلق فلسفیانہ مباحث، نظم قرآن، تدوین قرآن کی تاریخ، قرآن سے متعلق رویے اور فہم قرآن میں کی جانے والی عام غلطیوں کے بارے میں ہم مختلف نقطہ ہائے نظر کا مطالعہ کریں گے۔ دوسرا حصہ تفسیر سے متعلق مباحث پر مبنی ہو گا جس میں اصول تفسیر، تاریخ تفسیر، تفسیری طریق ہائے کار (Methodologies)، متن کا تجزیہ کرنے کے اصول اور اہم عربی، انگریزی اور اردو تفاسیر کا تعارف اور ان کی خصوصیات کا مطالعہ کیا جائے گا۔ اس کے ساتھ ساتھ اس ماڈیول میں ہم علوم القرآن سے متعلق اہم مباحث جیسے مستشرقین کے اعتراضات، ناسخ و منسوخ، محکم و متشابہ، اعجاز القرآن اور اس نوعیت کے دیگر مسائل کا مطالعہ کریں گے۔

ماڈیول QS01 ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے نیچے کلک کیجیے۔

ماڈیول 07 ,06 ,QS02, 03, 04, 05 صرف رجسٹرڈ طلباء و طالبات کے لیے ہیں۔ انہیں ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے پہلے رجسٹریشن فارم پر کیجیے۔ فارم کے لیے رجسٹریشن پر کلک کیجیے۔

پہلا ماڈیول ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے اس بٹن پر کلک کیجیے۔
Quranic Studies - Module 1
بقیہ تمام ماڈیولز صرف رجسٹرڈ طلباء و طالبات کے لیے ہیں۔ انہیں ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے پہلے رجسٹریشن فارم پر کیجیے۔ فارم کے لیے رجسٹریشن پر کلک کیجیے۔
Islamic Studies Program Registration